روضہ ہے مرے سامنے گھر بھول گیا ہوں

"نعت کائنات" سے
This is the approved revision of this page, as well as being the most recent.
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش

Aslam Faizi.jpg

شاعر : اسلم فیضی

اپنے تازہ کلام اس نمبر پر وٹس ایپ کریں 00923214435273

اپنے ادارے کی نعتیہ سرگرمیاں، کتابوں کا تعارف اور دیگر خبریں بھیجنے کے لیے رابطہ کیجئے۔Email.png Phone.pngWhatsapp.jpg Facebook message.png

نعتِ رسولِ آخر صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم[ترمیم]

روضہ ہےمیرے سامنے گھر بھول گیاہوں

تھا دل پہ جو دنیا كا اثر بھول گیا ہوں


اے گنبدِ خضرا میں تری چھاٶں كے قرباں

رستے كا ہر اك سبز شجر بھول گیا ہوں


اك ایسا سكوں شہرِ مدینہ میں ملا ہے

میں سارا جہاں سارے نگر بھول گیا ہوں


اس ساعتِ خوش بخت كےدامن سےلپٹ كر

وارفتگیِ شام و سحر بھول گیا ہوں


دیكھی ہے جو آكر تیرے دربار كی عظمت

ہر حسن كا معیارِ نظر بھول گیا ہوں


امید كے ساحل پہ جو اُترا ہوں تو فیضؔی

دكھ درد كی موجوں كے بھنور بھول گیاہوں


مزید دیکھیے[ترمیم]

اپنے تازہ کلام اس نمبر پر وٹس ایپ کریں 00923214435273

اپنے ادارے کی نعتیہ سرگرمیاں، کتابوں کا تعارف اور دیگر خبریں بھیجنے کے لیے رابطہ کیجئے۔Email.png Phone.pngWhatsapp.jpg Facebook message.png

نعت خوانی کے معروف کلام
"نعت کائنات " پر اپنے تعارفی صفحے ، شاعری، کتابیں اور رسالے آن لائن کروانے کے لیے رابطہ کریں ۔ سہیل شہزاد : 03327866659
نئے صفحات