ترے خیال کو دل میں بسا کے لایا ہوں ۔ عارف عبد المتین

"نعت کائنات" سے
This is the approved revision of this page, as well as being the most recent.
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش

Arif Abdul Mateen.jpg

شاعر : عارف عبد المتین

اپنے تازہ کلام اس نمبر پر وٹس ایپ کریں 00923214435273

اپنے ادارے کی نعتیہ سرگرمیاں، کتابوں کا تعارف اور دیگر خبریں بھیجنے کے لیے رابطہ کیجئے۔Email.png Phone.pngWhatsapp.jpg Facebook message.png

نعتِ رسولِ آخر صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم =[ترمیم]

ترے خیال کو دل میں بسا کے لایا ہوں

میں ایک ذرّے میں صحرا چھپا کے لایا ہوں


ترے کرم کی نہایت ہے یہ کہ تیرے حضورؐ

میں اپنے آپ کو خود سے بچا کے لایا ہوں


میں دیکھتا تھا کبھی جس میں اپنی ذات کا عکس

اس آئینہ کی میں کِرچیں اُٹھا کے لایا ہوں


یہ جاں کہ تجھ کو زمانے کا روپ کہتی ہے

میں قیدِ وقت سے اس کو چھڑا کے لایا ہوں


نظر کا سوز، تمنّا کی آنچ، غم کی جلن

میں خود کو سردِ چراغاں بنا کے لایا ہوں


کہاں ہے تیرگیِ خاکدان کہ میں امشب

فلک سے تیری تجلّی اُٹھا کے لایا ہوں


جلا مجھے کہ مہک اُٹھوں اے چراغِ حرم

میں اپنے جسم کو صندل بنا کے لایا ہوں!

مزید دیکھیے[ترمیم]

اپنے تازہ کلام اس نمبر پر وٹس ایپ کریں 00923214435273

اپنے ادارے کی نعتیہ سرگرمیاں، کتابوں کا تعارف اور دیگر خبریں بھیجنے کے لیے رابطہ کیجئے۔Email.png Phone.pngWhatsapp.jpg Facebook message.png

نئے اضافہ شدہ کلام
"نعت کائنات " پر اپنے تعارفی صفحے ، شاعری، کتابیں اور رسالے آن لائن کروانے کے لیے رابطہ کریں ۔ سہیل شہزاد : 03327866659
نئے صفحات