کنور مہندر سنگھ بیدی

"نعت کائنات" سے
(مہندر سنگھ بیدی سے پلٹایا گیا)

This is the approved revision of this page, as well as being the most recent.
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش

"نعت کائنات " پر اپنے تعارفی صفحے ، شاعری، کتابیں اور رسالے آن لائن کروانے کے لیے رابطہ کریں ۔ سہیل شہزاد : 03327866659
Mohender Singh Bedi.jpg


کنور مہندر سنگھ بیدی ، تخلص سحر۔ 9 مارچ 1909ء کومنٹگمری(ساہیوال) میں پیدا ہوئے۔ چیفس کالج ،لاہور میں1919ء سے 1925ء تک تعلیم پائی۔ پھر گورنمنٹ کالج، لاہور میں داخلہ لیا۔ اورتاریخ اور فارسی کے ساتھ بی اے کیا۔ تعلیم سے فارغ ہونے کے بعد پہلی تقرری لائل پور میں ہوئی۔ وہاں جولائی 1893ء سے دسمبر1935ء تک رہے۔ مختلف چہروں اور محکموں میں ملازمت کے بعد 1967ء میں ریٹائر ہوئے۔ وہ ۱۷؍جولائی 1998ء کو دہلی میں انتقال کرگئے۔

کنور مہندرسنگھ بیدی ایک کثیر الجہات شخصیت کی حیثیت سے جانے پہچانے جاتے تھے۔ 60 برس تک شاعری کی ۔ ان تمام مشغلوں میں شاعری میں وہ کسی کے شاگرد نہیں تھے۔انہوں نے اپنی شاعری میں حضرت رسول ِاکرم (ص) اور اہلِ نیت کی شان میں بھی بہت عمدہ خراج عقیدت پیش کیا ہے ۔

شاعری[ترمیم]

اس زمانہ کے دستور کے مطابق ان کی بنیادی تعلیم اُردو اور فارسی میں ہی ہوئی ۔مطالعہ کا شوق بچپن میں تھا۔کالج کے زمانے سے ہی شاعری کاشوق ہوگیا ۱۹۲۳ء میں جب وہ فرسٹ ائر میں تھے ،پہلی غزل کہی۔مشاعرہ میں وہ کسی کے شاگرد نہیں بنے البتہ ۱۹۳۴ء میں سرکاری ملازمت میں بطور مجسٹریٹ آنے کے بعدوہ دہلی کے قریب سونی پت میں تعینات ہوئے تو سے رشتہ استوار ہوا [[سائل دہلوی ] ،بیخود دہلوی،امرناتھ ساحردہلوی ،جوش ملیح آبادی ،پنڈت ہری چند اختر اور جگر مراد آبادی جیسے عظیم المرتبت شاعروں سے نزدیکیاں بڑھیں تو ان کی شاعری اور فکر کو بھرپور روشنی ملی

تصانیف[ترمیم]

ان کی تصانیف کے نام یہ ہیں:

’یادوں کا جشن‘(خودنوشت حالات زندگی)

’کلام کنورمہندر سنگھ بیدی سحر(انتخاب وتلخیص:احمدفراز)

نمونہِ کلام[ترمیم]

صرف مسلم کا محمدؐ پہ اجارہ تو نہیں[ترمیم]

ہم کسی دین سے ہوں، قائلِ کردار تو ہیں

ہم ثناء خوانِ شہِ حیدرِ کرارؐ تو ہیں


نام لیوا ہیں محمدؐ کے پرستار تو ہیں

یعنی مجبور پئے احمد مختار تو ہیں


عشق ہو جائے کسی سے، کوئی چارہ تو نہیں

صرف مسلم کا محمدؐ پہ اجارہ تو نہیں

میری نظروں میں تو اسلام محبت کا ہے نام[ترمیم]

میری نظروں میں تو اسلام محبت کا ہے نام

امن کا، آشتی کا مہر و مروت کا ہے نام


وسعت قلب کا ، اخلاص و اخوت کا ہے نام

تختہِ دار پہ بھی حق و صداقت کا ہے نام


میرا اسلام نِگہ و نام میں ہے، بد نام نہیں

بات اتنی ہے کہ اب عام یہ اسلام نہیں

شراکتیں[ترمیم]

یہ صفحہ صارف: ارم نقوی نے شروع کیا

مزید دیکھیے[ترمیم]

کنور مہندر سنگھ بیدی | کرپال سنگھ بیدار | ستنام سنگھ خمار | درشن سنگھ دکل | بلونت سنگھ فیض | گور بخش سنگھ مخمور جالندھری | پورن سنگھ ہنر | کرنیل سنگھ پنچھی | بی ڈی بیگم بوڑھ سنگھ