نہیں ہے کام اب مجھ کو کسی سے ۔ سید وحید القادری عارف

"نعت کائنات" سے
This is the approved revision of this page, as well as being the most recent.
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش

شاعر: وحید القادری عارف

نعت ِ رسول ِ کریم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم[ترمیم]

نہیں ہے کام اب مجھ کو کسی سے

میں وابستہ ہوں دامانِ نبی سے


وہ میرے ہیں میں دیوانہ ہوں اُن کا

یہ کہتا پھر رہا ہوں میں سبھی سے


مری نسبت ہی سرمایہ ہے میرا

یہی پایا ہے میں نے زندگی سے


مئی عشقِ نبی سے مست یوں ہوں

نہ نکلوں عمر بھر اس بے خودی سے


وہی کردینگے کشتی پار میری

بندھی اُمید ہے میری اُنہی سے


نویدِ موت طیبہ میں جو آئے

تو مرجاوں مسرّت سے خوشی سے


جو اُن کے ہوگئے عارفؔ وہ گویا

فرشتے ہوگئے ہیں آدمی سے


مزید دیکھیے[ترمیم]

پچھلا کلام | اگلا کلام | وحید القادری عارف کی حمدیہ و نعتیہ شاعری | وحید القادری عارف کا مرکزی صفحہ




اپنے ادارے کی نعتیہ سرگرمیاں، کتابوں کا تعارف اور دیگر خبریں بھیجنے کے لیے رابطہ کیجئے۔Email.png Phone.pngWhatsapp.jpg Facebook message.png

نئے اضافہ شدہ کلام
"نعت کائنات " پر اپنے تعارفی صفحے ، شاعری، کتابیں اور رسالے آن لائن کروانے کے لیے رابطہ کریں ۔ سہیل شہزاد : 03327866659
نئے صفحات