ہونٹوں پہ تو رہتا ہے سدا نام محمد ۔ نصیر بدایونی

"نعت کائنات" سے
نظرثانی بتاریخ 09:44, 22 اگست 2017 از تیمورصدیقی (تبادلۂ خیال | شراکت)$7

(فرق) ←پرانی تدوین | Approved revision (فرق) | حالیہ نظرثانی (فرق) | →اگلا اعادہ (فرق)
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش

شاعر: نصیر بدایونی

نعتِ رسولِ آخر صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم[ترمیم]

ہونٹوں پہ تو رہتا ہے سدا نامِ محمد

مانے ہیں کبھی آپ نے احکامِ محمد


پتّھر کی عمارت پہ تو ہوتا ہے چراغاں

دنیا میں روا کیجیے پیغامِ محمد


قرآن سے پائیں گے جو ہم راہِ ہدایت

سچ پوچھو یہی اصل ہے اسلامِ محمد


سیرت سے جو سیکھے گا یہاں آپ کی مولا

پھر خود ہی وہ پھیلائے گا پیغامِ محمد


اُمّت کی شفاعت کو چلے آئیں گے آقا

ہم پائیں گے یہ حشر میں انعامِ محمد


جو دل میں بسائے گا نصیر عشقِ محمد

لے گا بھی وہی قبر میں پھر نامِ محمد