"میرا فن روشن ہوا ان کے مقدس نام سے ۔ قیصر ابدالی" کے اعادوں کے درمیان فرق

"نعت کائنات" سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش
(نیا صفحہ: {{بسم اللہ}} شاعر: قیصر ابدالی ==== {{نعت}} ==== میرا فن روشن ہوا ان کے مقدس نام سے فکر میں بالیدگی آئی...)
 
(نیا صفحہ: {{بسم اللہ}} شاعر: قیصر ابدالی ==== {{نعت}} ==== میرا فن روشن ہوا ان کے مقدس نام سے فکر میں بالیدگی آئی...)
 
(No difference)

حالیہ نظرثانی بمطابق 08:39, 23 دسمبر 2017

شاعر: قیصر ابدالی

نعتِ رسولِ آخر صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم[ترمیم]

میرا فن روشن ہوا ان کے مقدس نام سے

فکر میں بالیدگی آئی ترے پیغام سے


جذبہ ءِ کامل ضروری ہے وفا کی راہ میں

منزلیں نزدیک خود آ جائیں گی اک گام سے


دیکھئے اعجاز ان کا پڑ گئی جن پر نظر

بن گئے وہ خاص جو لگتے تھے ہم کو عام سے


ہم کو قرآں نے نوازا دولتِ ایقان سے

رستگاری مل گئی ہے اس لیے اوہام سے


حسن انداز تکلم کے ہوئے ایسے اسیر

بچ نہ پائے آپ کے شیریں دہن کے دام سے


ساقی کوثر سدا ہو تیرے میخانے کی خیر

ایک جرعہ ہو عطا اپنے مبارک جام سے


مجھ کو آقا کی غلامی کے لیے بس چھوڑ دو

کام رکھو دوستو تم اپنے اپنے کام سے


ابنِ آدم جہل کی تاریکیوں میں غرق تھا

آگہی اس کو ملی ہے دعوت اسلام سے


جب قلم قیصر کا اٹھا مصطفیٰ کی شان میں

وہ بھی پہچانے گئے برسوں رہے گمنام سے

مزید دیکھیے[ترمیم]

زیادہ پڑھے جانے والے کلام