ملف:Naat kainaat naat research center.jpg

"نعت کائنات" سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش
Naat_kainaat_naat_research_center.jpg(254 × 249 عکصر (پکسلز)، حجم ملف: 31 KB، MIME قسم: image/jpeg)

مدحت نامہ (انتخاب نعت۔۔۔دبستان کراچی کے غیر صاحب کتاب نعت گو ) مرتبہ صبیح رحمانی

صبیح رحمانی کو رحمان نے جس خاص کام کے لیے چنا تھا ، اس کا وقت مناسب آئے ہوئے چند برس ہوئے ہیں ۔ صبیح نے اپنی شاعری کا آغاز غزلیہ شاعری سے کی مگر صبیح غزلوں کے لیے نہیں بلکہ نعت اور فروغ نعت کے لیے چنا گیا تھا لہٰذا اوائل عمری ہی میں صبیح نے غزل کے بجائے نعت کی طرف توجہ کی ۔ ایک تو قدرت نے لحن داؤی سے نوازا اور پھر دل بھی گداز دیا ، دل میں چاہت اللہ اور حب رسول اللہ بھی دیا ، اپنی خوبصورت آواز میں جب نعت فضائے دہر میں گونجتی تو ایک سماں پیدا جا تا تھا ۔ بات صرف نعت خوانی تک رہتی تو بھی اس کی عاقبت سنور رہی تھی مگر نعت خوانی بھی اس کی منزل نہیں تھی ۔ قدرت نے اس سے ایک بڑا کام لینا تھا ۔ پھر اس کے دل میں نعت کے فروغ کے لیے ایک رسالہ کا خیال آیا اور یوں ’’نعت رنگ‘‘ کا اجرا ہوا جس نے دیکھتے ہی دیکھتے ملک گیر نہیں بلکہ عالم گیر شہرت حاصل کی ، نعت رنگ صرف نعتوں کے انتخاب کا مجموعہ نہیں ہے بلکہ نعت اور متعلقات و تنقیدات و تشریحات و امکانات نعت کا ایک ایسا حسین مجلہ ہے جس میں اپنے وقت کے بڑے جید علمائے اسلام، علمائے ادب اور نقادوں نے حصہ لیا اور نعت کے حوالے سے ایسے ایسے لازوال ، لافانی اور معتبر مضامین شامل ہونے لگے کہ نعت رنگ صاحبان ایمان کے لیے جزو لاینفک بن گیا ۔ نعت رنگ نے اپنے دو تین برسوں ہی میں وہ چھب دکھائی کہ سب سبحان اللہ کہہ اٹھے اور اب نعت رنگ کا اسی طرح انتظار ہوتا ہے جس طرح ماضی میں کبھی سب رنگ کا ہوتا تھا ۔ مگر صبیح رحمانی کی منزل اب بھی دور تھی کہ بآلاخر صبیح نے اپنی منزل کو پا لیا اور پھر صبیح نے نعت کے فروغ و ارتقا کے ساتھ ساتھ نعت کے مختلف جہتوں پر کتابیں مرتب کیں اور مرتب کرائیں ۔اگرچہ صبیح رحمانی کے چار نعتیہ مجموعے آ چکے ہیں اور ان مجموعے کے انگریزی تراجم بھی آئے ، مگر صبیح نے اب تک آٹھ ایسے مجموعے تالیف کیے جن کی قدر اور اہمیت سے کوئی انکار نہیں کر سکتا ۔ مثلاً ایوان نعت (نعتیہ انتخاب ) جمال مصطفی (نعتیہ انتخاب ) نعت نگر کا باسی ، غالب اور ثنائے خواجہ، اردو کی نعت میں تجلیات سیرت ، اردو نعت کی شعری روایت اور مدحت نامہ ( پیش خدمت ) نے نعت کے ادب میں ایک گراں قدر اضافہ کیا ہے ۔ صبیح نے ایک اور بڑا کام یہ کیا ہے کہ اپنے ساتھ ایسے صاحبان درد کو ساتھ ملا کر نعت کے دامن کوان کی تالیفات و تصنیفات جو مثل گہر ہائے آبدار ہیں، بھر دیا کہ آج نعت کا وسیع و عریض محل ہے اور نعت پر کام کرنے والوں کے لیے دامن کشا ہے ۔ان احباب میں ڈاکٹر عزیز احسن نے نعت نگاری و تنقید نعت میں بڑا وقیع کام کیا ہے ، رشید وارثی اور عارف منصور نے بھی اپنا اپنا حصہ ڈالا اور مزید ثروت مند ہوتے مگر وہ اپنے خالق سے جا ملے ۔ دیگر احباب بھی اپنی دنیا اور عاقبت کو نعت رنگ سے مصور کر رہے ہیں ۔ پیش نظر کتاب ’’مدحت نامہ‘‘ دبستان کراچی کے ان شعر ا کی نعتوں کا انتخاب ہے جو کسی وجہ سے اپنا نعتیہ مجموعہ نہ مرتب کر سکے۔ اس طرح بارگاہ رحمت اللعالمین میں ان کی نعت کا نذرانے کا یہ مجموعہ ان کے اعمال نامے میں ایک گہر ہائے آب دار کی طرح چمکے گا ۔مدحت نامہ میں تقریباً سوا دو سو شعرائے کراچی کی ایک /دو نعت شامل ہیں،ان شعرا میں سے جن کی تاریخ پیدائش دستیاب تھی اسے بھی شامل کیا ہے اور جن کی وفات کی تاریخ مل گئی اسے درج کر دیا ہے ۔ان شعرا کے نعتیہ مجموعے باجود شائع نہیں ہو سکے مگر اس فہرست میں ایسے ایسے شعرا بھی شامل ہیں جن کے نام سے بھی بڑی حیرانی ہوئی کہ صبیح نے کس دقت سے ان کے بارے میں کھوج لگایا اور ان کی نعت حاصل کی کیونکہ جب آپ اس کتاب کا مطالعہ کریں گے تو آپ بھی ورطہ حیرت میں پڑجائیں گے ۔ صبیح نے یہ عمل کسی نام و نمود کے لیے نہیں کیا بلکہ ایک طرح سے ان کی نعت شامل کر کے ان کی عاقبت میں بہتری کے لیے راہ آسان کی ہے ۔ کتاب کا سرورق بڑا خوبصورت ہے بلکہ ایمان افروز ہے ۔ قیمت بھی مناسب ہے اور طباعت بھی نفیس مگر ان سے ہٹ کر جو چیز دیکھی جاتی ہے وہ اس کتاب کا اصل ہے کہ کتاب میں جو مواد ہے وہ انمول ہے ۔

ملف کی تاریخ

یہ دیکھنے کیلئے کہ کسی خاص وقت پر ملف کس طرح ظاہر ہوتا تھا اُس تاریخ یا وقت پر طق کیجئے۔

تاریخ/وقتاظفورہابعادصارفتبصرہ
حالیہ03:22, 8 ستمبر 201703:22, 8 ستمبر 2017 کا تھمب نیل (thumbnail) ورژن254 × 249 (31 KB)Admin (تبادلۂ خیال | شراکت)
23:46, 18 مارچ 2017No thumbnail728 × 589 (42 KB)Admin (تبادلۂ خیال | شراکت)
  • آپ اوپر چھڑا کر اس ملف کو نہیں لکھ سکتے۔

میٹا ڈیٹا