ہم سوئے حشر چلیں گے شہ ابرار کے ساتھ ۔ مظہر الدین مظہر

"نعت کائنات" سے
This is the approved revision of this page, as well as being the most recent.
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش

"نعت کائنات " پر اپنے تعارفی صفحے ، شاعری، کتابیں اور رسالے آن لائن کروانے کے لیے رابطہ کریں ۔ سہیل شہزاد : 03327866659

شاعر: مظہر الدین مظہر


نعتِ رسولِ کریم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم[ترمیم]

ہم سوئے حشر چلیں گے شہِ ابرار کے ساتھ

قافلہ ہوگا رواں قافلہ سالار کے ساتھ


رہ گئے منزل سدرہ پہ پہنچ کر جبریل

چل نہیں سکتا فرشتہ تری رفتار کے ساتھ


یہ تو طیبہ کی محبت کا اثر ہے ورنہ

کون روتا ہے لپٹ کر در و دیوار کے ساتھ


اے خدا دی ہے اگر نعتِ نبی کی توفیق

حُسنِ کردار بھی دے لذت گفتار کے ساتھ


پُل سے مجھ سا بھی گنہگار گزر جائے گا

ہوگی سرکار کی رحمت جو گنہگار کے ساتھ


رات دن بھیج سلام انُ پہ ملائک کی طرح

پڑھ درود انُ پہ غلامانِ وفادار کے ساتھ


دیکھ اے معترض نعتِ رسول عربی!

قُرب حساں کو ملا تھا انہی اشعار کے ساتھ


سب عطائیں ہیں خدا کی میرے مولا کے طفیل

ورنہ یہ لطف و کرم مجھ سے گنہگار کے ساتھ


ہم بھی مظہر سے سنیں گے کوئی نعت رنگیں

گر ملاقات ہوئی شاعرِ دربار کے ساتھ