ہم خاک ہیں اور خاک ہی ماوا ہے ہمارا

"نعت کائنات" سے
This is the approved revision of this page, as well as being the most recent.
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش

نعت رسول کریم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم


از امام احمد رضا خان بریلوی


ہم خاک ہیں اور خاک ہی ماوا ہے ہمارا

خاکی تو وہ آدم جد اعلیٰ ہے ہمارا


اللہ ہمیں خاک کرے اپنی طلب میں

یہ خاک تو سرکار سے تمغا ہے ہمارا


جس خاک پہ رکھتے تھے قدم سید عالم

اس خاک پہ قرباں دل شیدا ہے ہمارا


خم ہو گئی پشتِ فلک اس طعنِ زمیں سے

سن ہم پہ مدینہ ہے وہ رتبہ ہے ہمارا


اس نے لقب خاک شہنشاہ سے پایا

جو حیدر کرار کہ مولےٰ ہے ہمارا


اے مدعیو! خاک کو تم خاک نہ سمجھے

اس خاک میں مدفوں شہ بطحا ہے ہمارا


ہے خاک سے تعمیر مزارِ شہ کونین

معمور اسی خاک سے قبلہ ہے ہمارا


ہم خاک اڑائیں گے جو وہ خاک نہ پائی

ااباد رضا جس پہ مدینہ ہے ہمارا


حدائق بخشش[ترمیم]

حدائق بخشش


پچھلا کلام[ترمیم]

الاماں قہر ہے اے غوث وہ تیکھا تیرا


اگلا کلام[ترمیم]

غم ہو گئے بے شمار آقا