لطف عمیم ہو گیا ، رحمت عام کے سبب ۔ ارشد محمود ناشاد

"نعت کائنات" سے
This is the approved revision of this page, as well as being the most recent.
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش

"نعت کائنات " پر اپنے تعارفی صفحے ، شاعری، کتابیں اور رسالے آن لائن کروانے کے لیے رابطہ کریں ۔ سہیل شہزاد : 03327866659

شاعر: ارشد محمود ناشاد

نعتِ رسولِ کریم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم[ترمیم]

لطفِ عمیم ہو گیا ، رحمتِ عام کے سبب

بزمِ جہاں ہے نور نور ، ماہِ تمام کے سبب


شرک کی سانس اُکھڑ گئی ، کفر کا دم نکل گیا

تیرے پیام کے طفیل ، تیرے نظام کے سبب


تُجھ سے ہوا جو منتسب ، اُس کا نصیب جاگ اُٹھا

خاکِ عرب ہے سر بلند ، تیرے قیام کے سبب


خلق کو راستہ ملا ، تیرے عمل کے حسن سے

رازِ حیات منکشف ، تیرے کلام کے سبب


ہونٹوں پہ دل کشی رہے ، دل کی کلی کھلی رہے

گاہے درود کے سبب ، گاہے سلام کے سبب


بے کس و بے مقام بھی ، اُن کے طفیل باشرف

صنفِ لطیف معتبر ، فخرِ انام کے سبب


کُچھ بھی نہیں ہے زادِ ھشر ، خالی ہے کاسۂ عمل

پھر بھی یقیں نجات کا ، ہاں! ترے نام کے سبب