سب سے اولیٰ و اعلیٰ ہمارا نبی

"نعت کائنات" سے
This is the approved revision of this page, as well as being the most recent.
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش

سب سے اولیٰ و اعلیٰ ہمارا نبی[ترمیم]

سب سے اولیٰ و اعلیٰ ہمارا نبی

سب سے بالا و والا ہمارا نبی


اپنے مولیٰ کا پیا را ہمارا نبی

دونوں عالم کا دولھا ہمارا نبی


بزمِ آخر کا شمع فروزاں ہوا

نور اوّل کا جلوہ ہمارا نبی


جس کو شایاں ہے عرش خُدا پر جلوس

ہے وہ سلطانِ والا ہمارا نبی


بجھ گئیں جس کے آگے سبھی مشعلیں

شمع وہ لے کر آیا ہمارا نبی


جس کے تلووں کا دھوون ہے آبِ حیات

ہے وہ جانِ مسیحا ہمارا نبی


عرش و کرسی کی تھیں آئینہ بندیاں

سوئے حق جب سدھارا ہمارا نبی


خلق سے اولیا اولیا سے رسل

اور رسولوں سے اعلیٰ ہمارا نبی


حسن کھاتا ہے جس کے نمک کی قسم

وہ ملیحِ دِل آرا ہمارا نبی


ذکر سب پھیکے جب تک نہ مذکور ہو

نمکیں حسن والا ہمارا نبی


جس کی دو بوند ہیں کوثر و سلسبیل

ہے وہ رحمت کا دریا ہمارا نبی


جیسے سب کا خدا ایک ہے ویسے ہی

اِن کا اُن کا تمہارا ہمارا نبی


قرنوں بدلی رسولوں کی ہوتی رہی

چاند بدلی کا نکلا ہمارا نبی


کون دیتا ہے دینے کو منہ چاہیے

دینے والا ہے سچا ہمارا نبی


کیا خبر کتنے تارے کھِلے چھپ گئے

پر نہ ڈوبے نہ ڈوبا ہمارا نبی


ملک کونین میں انبیا تاجدار

تاجداروں کا آقا ہمارا نبی


لامکاں تک اجالا ہے جس کا وہ ہے

ہر مکاں کا اُجالا ہمارا نبی


سارے اچھوں میں اچھا سمجھیے جسے

ہے اُس اچھوں سے اچھا ہمارا نبی


انبیا سے کروں عرض کیوں مالکو!

کیا نبی ہے تمہارا ہمارا نبی


جس نے ٹکڑے کیے ہیں قمر کے وہ ہے

نور وحدت کا ٹکڑا ہمارا نبی


سب چمک والے اجلوں میں چمکا کیے

اندھے شیشوں میں چمکا ہمارا نبی


جس نے مردہ دلوں کو دی عمر ابد

ہے وہ جانِ مسیحا ہمارا نبی


غمزدوں کر رضا مژدہ دیجے کہ ہے

بیکسوں کا سَہارا ہمارا نبی