زہے نصیب یہ دولت اگر بہم ہو جائے ۔ ارشد محمود ناشاد

"نعت کائنات" سے
This is the approved revision of this page, as well as being the most recent.
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش

Arshad Nashad.jpg

شاعر: ارشد محمود ناشاد

مطبوعہ : 2017 - بہترین نعت کی تلاش

کیٹگری: 1

کلام نمبر : 48

نعتِ رسولِ آخر صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم[ترمیم]

زہے نصیب ! یہ دولت اگر بہم ہو جائے

میں تیرا ذکر کروں اور آنکھ نم ہو جائے


اُسی کے تاج میں سجتا ہے دو جہاں کا شرف

وہ سر جو آپ کی چوکھٹ پہ آ کے خم ہو جائے


حضورؐ! دل میں عجب خواہشوں کا ڈیرا ہے

یہ بُت کدہ ترے الطاف سے حرم ہو جائے


ترے دیار کی گلیوں کا میں طواف کروں

مرا وجود تری خاکِ رہ میں ضم ہو جائے


حضورؐ! میرا وطن بے کلی کی زد میں ہے

حضورؐ! آپ جو چاہیں تو یاں کرم ہو جائے


حضورؐ! سیلِ محبت یہاں سے جاری ہو

حضورؐ! بغض و عداوت یہاں سے کم ہو جائے


مرے حروف میں اُترے ترے جمال کا رنگ

مرا ہُنر تری نسبت سے محترم ہو جائے

نئے صفحات

2017 کی بہترین نعت کی تلاش[ترمیم]

تعارف
کیٹگری 1
کیٹگری 2
کیٹگری 3

کیٹگری 2 کی نعتیں[ترمیم]

1 2 3 4 5 6 7 8 9 10 11 12 13 14 15 16 17 18 19 20 21 22 23 24
25 26 27 28 29 30 31 32 33 34 35 36 37 38 39 40 41 42 43 |44 45 46 47 48
49 50 51 52 53 54 55 56 57 58 59 60 61

مزید دیکھیے[ترمیم]

اپنے تازہ کلام اس نمبر پر وٹس ایپ کریں 00923214435273

اپنے ادارے کی نعتیہ سرگرمیاں، کتابوں کا تعارف اور دیگر خبریں بھیجنے کے لیے رابطہ کیجئے۔Email.png Phone.pngWhatsapp.jpg Facebook message.png

نئے اضافہ شدہ کلام