حال دل کس کو سناوں آپ کے ہوتے ہوئے ۔ اقبال عظیم

"نعت کائنات" سے
This is the approved revision of this page, as well as being the most recent.
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش

"نعت کائنات " پر اپنے تعارفی صفحے ، شاعری، کتابیں اور رسالے آن لائن کروانے کے لیے رابطہ کریں ۔ سہیل شہزاد : 03327866659

شاعر : اقبال عظیم

نعتِ رسولِ کریم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم[ترمیم]

حالِ دل کس کو سناوں آپ کے ہوتے ہوئے

اور دَر پہ کس کے جاوں آپ کے ہوتے ہوئے


میرے تو سب کچھ ہی آقاﷺ آپ ہیں صرف آپ ہیں

اور لو کس سے لگاوں آپ کے ہوتے ہوئے


میرے دکھ کو اور کوئی چارہ گر سمجھے گا کیا

زخمِ دل کس کو دکھاوں آپ کے ہوتے ہوئے


میں کسی حاتم کے آگے اک سوالی کی طرح

ہاتھ کیوں پھیلانے جاوں آپ کے ہوتے ہوئے


میرے تو دکھ درد کے واحد مسیحا آپ ہیں

اور میں کس کو بلاوں آپ کے ہوتے ہوئے


میں بہت شرمندہ ہوں اپنے گناہوں پر مگر

یہ حقیقت کیوں چھپاوں آپ کے ہوتے ہوئے


جو ستم مجھ پر ہوئے ہیں وقت کے ہاتھوں حضورﷺ

اور میں کس کو بتاوں آپ کے ہوتے ہوئے


میرے لہجے کی تڑپ کو اور پہچانے گا کون

نعت کس کو جا سناوں آپ کے ہوتے ہوئے


آپ کا اقبال میرے ساتھ ہے تو فکر کیا

رنجِ محشر کیوں اٹھاوں آپ کے ہوتے ہوئے

مزید دیکھیے[ترمیم]

نئے اضافہ شدہ کلام
مارچ 2019 - سید صبیح الدین رحمانی کو "تمغہ امتیاز" ملنے پر مبارک باد

اپنے ادارے کی نعتیہ سرگرمیاں، کتابوں کا تعارف اور دیگر خبریں بھیجنے کے لیے رابطہ کیجئے۔Email.png Phone.pngWhatsapp.jpg Facebook message.png

"نعت کائنات " پر اپنے تعارفی صفحے ، شاعری، کتابیں اور رسالے آن لائن کروانے کے لیے رابطہ کریں ۔ سہیل شہزاد : 03327866659
نئے صفحات